We have been working very hard since 2009 to facilitate in your learning Read More. We can't keep up without your support. Donate Now.

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More


میں بظاہر جو بہت سادہ ہوں بے حس نظر آتا ہوں تمھیں 
ایسا دریا ہوں جہاں سطح کے نچےہ چپ چاپ

موجیں شوریدہ ہیں، طوفان اٹھا کرتے ہیں 
ٹھہرا پانی ہوں، مگر اس میں بھنور پڑتے ہیں

زخم سب اپنے چھپائے ہیں، ہنسی کے پیچھے 
صرف اس واسطے شانوں پہ ردائے تہذیب

ڈالے رہتا ہوں کہ حیواں نہ کہے کوئی مجھے 
وہ ثقافت جسے کہتے ہیں، اثاثہ، ورنہ

سالہا سال کی محنت ہے جو انسانوں کی
میرے اِک فعل سے غارت نہ کہیں ہو جائے

ورنہ تم سامنے آتی ہو تو سر سے پا تک
دوڑ جاتی ہے کبھی آگ سی تیزاب سا اک شعلہ سا

تم کو معلوم ہے اس دور میں میرے دن رات
صرف اس واسطے با معنی ہیں تم سامنے ہو

تم کو معلوم ہے یہ گردش ایام مجھے
کیوں بھلی لگتی ہے، کیوں دیکھ کے تم کو آنکھیں

مسکرا اٹھتی ہیں، میں شاد نظر آتا ہوں 
میں جو اس پھیلی ہوئی دنیا میں یوں جیتا تھا

جیسے یہ بستی نہیں، شہر ہے اک لاشوں کا
جس میں انسان نہیں مردے ہیں کفن پہنے ہوئے

اور ان مردوں میں لب سوختہ، میں بھی ہوں کہیں 
تم نے احساس دلایا نہیں، میں لاش نہیں

اپنی گفتار کی گرمی سے حرارت بخشی
منجمد خون کو دوڑا دیا شریانوں میں

کھینچ لائیں مجھے، تنہائی کی دنیا سے یہاں 
میں الف لیلیٰ کا کردار نہیں ہوں کوئی

تم بھی افسانوی محبوبہ نہیں اور نہ تھیں 
پھر روایاتی ستم کیوں کیا تم نے مجھ پر؟

خود ہی وارفتہ ہوئیں، کھینچ گئیں خود ہی ایسے 
جیسے میں واقعی اِک لاش ہوں چلتی پھرتی

اب تمھیں دیکھ کے میں دل سے دعا کرتا ہوں 
لاش بن جاؤں میں، سچ مچ ہی، یہ بیگانہ روی

یہ نیا طرزِ وفا، تم نے جو سیکھا ہے ابھی
کچے شیشے کی طرح ٹوٹ کے ریزہ ہو جائے

اور تم مجھ سے ہر اک خوف کو ٹھکراتے ہوئے 
چیخ کر ایسے لپٹ جاؤ، کلیجہ پھٹ جائے!


+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)


Views: 138

Reply to This

Replies to This Discussion

Beautiful words dear sis really very nice lines 

اب تمھیں دیکھ کے میں دل سے دعا کرتا ہوں 
لاش بن جاؤں میں، سچ مچ ہی، یہ بیگانہ روی

یہ نیا طرزِ وفا، تم نے جو سیکھا ہے ابھی
کچے شیشے کی طرح ٹوٹ کے ریزہ ہو جائے

اور تم مجھ سے ہر اک خوف کو ٹھکراتے ہوئے 
چیخ کر ایسے لپٹ جاؤ، کلیجہ پھٹ جائے!

Beautiful Lines 

Nice Discussion 

very nice keep sharing

RSS

Looking For Something? Search Here

HELP SUPPORT

This is a member-supported website. Your contribution is greatly appreciated!

© 2020   Created by +M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.