We have been working very hard since 2009 to facilitate in learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

ہم ہمیشہ اپنی زندگی میں آئے کمزور لمحوں پہ شرمندہ اور پشیمان رہتے ہیں.
کچھ بھی کر کے، کسی بھی طرح اپنی زندگی سے ان لمحوں کو نکال پھینکنا چاہتے ہیں
جن میں ہم کمزور پڑ گئے تھے، رو ديئے تھے کسی ہمدرد کے کندھے پہ سر رکھ کر.

جبکہ میرے خیال میں ہمیں ان لمحوں کا شکر گزار ہونا چاہئے.
کیوں کہ انہی لمحوں میں ہم نے يه جانا ہوتا ہے کہ ہم تھوڑے بہت معصوم اب بھی ہیں.
اسی پل تو ہمیں احساس ہوا ہوتا ہے کہ بھلے ہی بظاھر هم پتهر كى طرح مضبوط اور بے حس بنے بیٹھے ہوں،
اندر کہیں دل اب بھی روئی کے گالے جیسا ہے،
جو رو پڑتا ہے، ہنس دیتا ہے، محسوس کر سکتا ہے.

ہم لاکھ انکار کریں، لاکھ خود کو super person ظاہر کرنے کی کوشش کرتے رہیں، لیکن کسی ہمدرد کی ضرورت ہمیں ہمیشہ رہتی ہے.

انسان کمزور ہے سو اسے اپنی زندگی میں آئے کمزور لمحوں سے کبھی شرمسار نہیں ہونا چاہئے...
کمزور لمحے تو طاقت ہوتے ہیں، وہی تو ہمیں احساس دلاتے ہیں کہ ہم کتنے بے مایا ہیں، نہ چیز ہیں،
اور ہمارے لئے الله کا کرم اور اس کے بندوں کا ساتھ کتنا ضروری ہے.

پنجابی کی ایک کہاوت ہے کہ...
"بندہ ای بندے دا دارو اے".
اور بندے کو بندے کا دارو اس خالق حقيقى نے ہی تو بنایا ہے. 


Views: 252

Reply to This

Replies to This Discussion

NICE............................

Thanks

really nice

Thanks 

thanks 

well said

Thanks

VERY NICE

RSS

Looking For Something? Search Below

Latest Activity

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service