We are here with you hands in hands to facilitate your learning & don't appreciate the idea of copying or replicating solutions. Read More>>

Looking For Something at vustudents.ning.com? Click Here to Search

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More


Dear Students! Share your Assignments / GDBs / Quizzes files as you receive in your LMS, So it can be discussed/solved timely. Add Discussion

How to Add New Discussion in Study Group ? Step By Step Guide Click Here.

"ٹرن ، ٹرن ،ٹرن" رات کے ساڑھے تین بجے

"ٹرن ، ٹرن ،ٹرن" رات کے ساڑھے تین بجے فون کی گھنٹی کی آواز سن کر نعیم جاگ گیا اور "یا اللہ خیر" کہتے ہوۓ فون اٹھا لیا۔
"نعیم صاحب مارکیٹ میں بجلی کے شارٹ سرکٹ کی وجہ سے آگ لگ گئ ہے اور بہت سے لوگوں یی دوکانیں جل کر خاکستر ہو چکی ہیں ، آپ جتنی جلدی ہوسکے یہاں تشریف لائیں اور آکر اپنی دوکان سنبھالیں"
دوسری طرف سے اس کا ایک جاننے والا یہ خبر سنا رہا تھا۔
"اوہ ، اللہ مہربانی فرماۓ ، اب نماز کا وقت ہونے والا ہے میں نماز کے بعد آجاؤں گا" نعیم نے جواب دیا۔
"حد ہوگئ یار ، ابھی تک اگر کچھ بچ بھی گیا ہوا تو آپ کے نماز پڑھنے تک بھسم ہو جاۓ گا" جواب ملا۔
"کوئ بات نہیں اللہ مالک ہے" یہ کہ کر اس نے فون رکھ دیا۔
اطمینان سے نماز ادا کی ، اپنے رب سے دعا مانگی اور گاڑی نکال کر مارکیٹ کی طرف چل پڑا۔
مارکیٹ کے اردگرد کی فضا آگ اور دھویں کے بادلوں سے گھری ہوئی تھی اور لوگ اپنے سامان کا نقصان ہونے پہ دکھ بھری آہیں لے رہے تھے ، کچھ گورنمنٹ کو کوس رہے تھے ، کچھ مقامی انتظامیہ کو اور کچھ اپنے رب سے شکوے کرنے میں مصروف تھے۔
نعیم کے علاوہ ہر کوئی اپنی دوکان کھول کر دیکھ چکا تھا ، اور لوگوں کا تقریباً پورا کا پورا مال جل کر خاکستر ہوچکا تھا۔
اس نے سب کے سامنےاللہ کانام لے کر اپنی دوکان کھولی تو لوگوں کی آنکھیں حیرانی سے کھلی کی کھلی رہ گئیں جب انہوں نے دیکھا کہ اس کا سارا مال سلامت تھا۔
لیکن نعیم کی نظریں بے چینی سے کپڑوں کے ایک تھان کی طرف دیکھ رہی تھیں جس کو آگ نے ایک سائیڈ سے معمولی سا جلا دیا تھا ، لوگوں نے حیرانی سے کہا کہ تمہارا سارا مال بچ گیا ہے اور تم ایک تھان کے ہلکا سا جل جانے پہ پریشان ہو؟؟
اس نے جواب دیا کہ میں زکوٰۃ پوری اور باقاعدگی سے ادا کرتا ہوں ، اور کبھی کسی کو غلط یا دونمبر مال نہیں دیتا پھر بھی یہ جل گیاہے ، کوئی گربڑ ضرور ہے۔
حسابات نکال کر دلجمعی اور احتیاط سے حساب کرنے پہ معلوم ہوا کہ اس دفعہ زکوٰۃ کا مال ادا کرتے ہوۓ غلطی سے کچھ کمی ہوگئ تھی ، اس پہ اللہ نے اپنے بندے کو یاددہانی کرائی تھی۔
اس نے فوری طور پہ وہ مال ادا کیا اور اپنا مال بچ جانے پہ بے اختیار اللہ کا شکر ادا کیا۔
ایمانداری سے کماۓ گۓ حلال مال کی اللہ حفاظت کرتا ہے اوراللہ پاک کا حکم ہے کہ زکوٰۃ ادا کرو۔
اس طرح کی کئ مثالیں ہمارے معاشرے میں موجود ہیں بس ان سے سبق حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔
رمضان المبارک کے مہینے میں ھی نھیں بلکہ باقی مہینو ں میں بھی اپنے دل کو اللہ کی طرف راغب کیجیے اور ایماندری کی زندگی گزارنے کا عزم کیجے۔

+ How to Follow the New Added Discussions at Your Mail Address?

+ How to Join Subject Study Groups & Get Helping Material?

+ How to become Top Reputation, Angels, Intellectual, Featured Members & Moderators?

+ VU Students Reserves The Right to Delete Your Profile, If?


See Your Saved Posts Timeline

Views: 216

.

+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)

Reply to This

Replies to This Discussion

Such a beautifully conveyed message SubhanAllah...

In shaa Allah

JazakAllah khair ...

hmm

nice post 

thanks

Ameen

jaza kumullah e khair  

 very nice post  keep it  up 

hmm thanks

nice sharing sis

thanks

Beshak Subhanallah

nice sharing

RSS

© 2020   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.