We are here with you hands in hands to facilitate your learning & don't appreciate the idea of copying or replicating solutions. Read More>>

Looking For Something at vustudents.ning.com? Click Here to Search

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More


Dear Students! Share your Assignments / GDBs / Quizzes files as you receive in your LMS, So it can be discussed/solved timely. Add Discussion

How to Add New Discussion in Study Group ? Step By Step Guide Click Here.

#لازمی #پڑھیں۔۔۔
 ٹیچر نے کلاس روم میں داخل ہوتے ہی ہائے گڈمارننگ کہتے ہوئے گلے سے ڈوپٹہ اتار کر اسے فولڈ کر کے منی بیگ میں رکھ دیا
 کلاس میں لڑکے لڑکیاں اکٹھے بیٹهے تهے ناصر بهی ٹیچر فائزہ کا سٹوڈنٹ تها جو ہمیشہ پیچهے بیٹهتا تها 13 سال کی عمر تهی بلوغت کے دن تهے ناصر کی اس عمر میں جسمانی و ذہنی تبدیلی رونما ہو رہی تھی
 ان دنوں اسے عجیب سی فیلنگز ہو رہی تھی ذہن کی پختگی کا احساس اور شعور کی طرف قدم رکھ رہا تھا 
 فائزہ ایک اچهی سائنس ٹیچر تهی بچوں کے ساتھ فرینکنس اور محبت کے ساتھ پیش آنا سمائل سے گفتگو کرنا ہر ایک کو ایسے مخاطب کرنا جیسے ٹیچر مجھ سے بہت پیار کرتی ہیں 
فائزہ کی عمر 211 سال تهی خوبصورت شکل کے ساتھ ساتھ انداز، مزاج، سمائل اور خدوخال بهی نہایت خوبصورت تهے
 ناصر کے پاس جب بهی ٹیچر کچھ پوچھنے آتی تو ٹیچر کی لگائی ہوئی ہلکی سی میٹهی خوشبو اس کے دل و دماغ کو معطر کر دیتی جس سے چند لمحوں کیلئے ناصر کو دنیا کی رنگینیوں کا احساس ہوتا ہونہار طالب علم کو میڈم کی محبت رفتہ رفتہ دل میں گهر کر کے اپنا مقام بنا چکی تهی ناصر کا دل و دماغ اب پڑهائی کی بجائے ٹیچر کی خوبصورت باتوں اور ابهری ہوئی حساس چیزوں میں مگن رہتا اور گفتگو سننے کیلئے بے تاب ....
 میڈم جب تک کلاس روم میں رہتی سر تو دور گلے میں بهی ڈوپٹہ نہ رہتا (غالباً ٹیچر نے عامر لیاقت کا پروگرام دیکها ہوگا ) ناصر ٹیچر کو ایک الگ نظر سے دیکهتا .... اس کے چارمنگ سٹائل میڈم کی چال ڈھال ، میک اپ ، ذلفیں ، لباس ، صدر و عین اس کی آنکهوں میں تیر کہ طرح پیوست ہو رہے تھے ایسے محسوس ہو رہا تھا کہ شاید ناصر کے دل کی دنیا اب میڈم نے ہی آباد کرنی ہے اس کے بغیر زندگی بے سود سی بے رونق سی دنیا کی خوشیاں ماند ہیں اس کی رنگینیوں کا حسن گویا ختم 
 ٹیچر کو دیکهنے میں روح کی تسکین ہونے لگی دل ہی دل میں اسے حاصل کرنے کے لیے تڑپ پیدا ہو رہی تھی ....
 عقلی و شعور کی پختگی نہ ہونے کہ وجہ سے ٹیچر کو اپنے دل کہ دیواروں کے رنگ و بو بتا نہیں سکتا تها بس انہی رنگین دیواروں میں لاحاصل سر مارتا رہتا اس کی یہ کیفیت کیوں ہوگئی یہ ناصر کو خود بهی علم نہیں تها زمانہ بلوغت کتنا حساس ہوتا ہے والدین کیوں نہیں سمجهتے ... 
 ایک عورت کو اللہ نے خوبصورت بنایا مرد کیلئے اس میں کشش رکهی اس کا ابهرا ہوا جسم کس قدر جنس متضاد پر نقش چهوڑتا ہے یہ خواتین کیوں نہیں سمجهتی .... 
 ناصر ٹیچر کے عشق میں غرق ہو چکا تھا شاید قلزم فائزہ کی ابهرتی ہوئی لہروں نے اسے مار کر ساحل پر اتار دیا تها
 والدین کو تو نہ بتا سکا اپنی حالت لیکن ٹیچر جو اس کی کیفیت محسوس کر رہی تهی اسے بتا گیا کہ تم میری نہیں ہو سکتی میں بھی کسی کا نہیں ہو سکتا .... آخر دی اینڈ ہوگیا قصہ خودکشی میں تمام ہوگیا !!!
اب اگر میں کہوں کہ قصور ٹیچر کا تها تب بهی میں مجرم ...
 کیونکہ استاد تو والدین کا درجہ رکھتے ہیں لیکن آج ٹیچر خود کو استاد کی طرح نہیں بلکہ بطورِ ماڈل فیشن ایبل بن کر فقط دنیاوی علم اور روشن خیالی کی طرف راغب کر رہے ہیں جس سے بچوں میں منفی خیالات و اثرات مرتب ہو رہے ہیں جس سے ہمارے بچے مستقبل میں سائنس دان تو بن جاتے ہیں مگر ایک اچهے انسان نہیں !!
اگر کہوں کہ قصور والدین کا تها تب بهی میں مجرم ...
 کیونکہ کوئی ماں باپ بهی اپنے بچوں کا برا نہیں سوچتے لیکن ان سے جو غلطیاں سرزد ہوتی ہیں وہ غیر معمولی ہوتی ہیں اپنے بچے کی حرکات و سکنات پر نظر نہ رکهنا
 ان کے ساتھ دوستانہ ماحول نہ بنانا ان کے دل کی بات نہ پوچهنا ان کو اہمیت نہ دینا ان کے دوستوں پر نظر نہ رکهنا
 ان کی اچهی تربیت نہ کرنا یہی غلطیاں ہیں والدین کی جو مستقبل میں بچے کو نہ اچها باپ بننے دیتی ہیں نہ اچها انسان بلکہ والدین کو بھی بچے ٹهوکر مار دیتے ہیں پهر ماں باپ اولاد کی نافرمانی کا ڈھنڈورا پیٹتے ہیں !!
اگر کہوں کہ قصور ٹی وی اور میڈیا کا تها تب بهی میں مجرم
کیونکہ فحش میڈیا کو برا کہو تو لوگ آپ کو شدت پسند اور محدود سوچ کا مالک کہیں گے 
 حالانکہ یہی میڈیا آپ کے بچوں کی غلط تربیت کر رہا ہے میڈیا بےحیائی کو روشن خیالی اور فیشن باور کرواتا ہے جس سے ینگ جنریشن کو بیمار زہن کا مالک بنا رہا ہے لڑکے لڑکیوں سے فلرٹ ہر نوجوان کے ذہن میں فلموں ڈراموں کے ذریعے عشق و محبت کے نام پر گندگی ڈال رہا ہے ڈراموں میں محبت کے افسانے عشق کیلئے مرنا خود کشی کرنا محبت پانے کیلئے ہر اک حد سے تجاوز کر جانا یہ میڈیا ہماری نسل کو کیا دے رہا ہے سوچیں ضرور سوچیں !!
اگر کہوں کہ قصور مخلوط تعلیم کا تها تب بهی میں مجرم قرار 
 کیونکہ مخلوط تعلیم کے دلدادہ تو روشن خیال لبرل ہیں جنہیں بیٹی کی عزت کا خیال نہ حیاء کا پاس البتہ بیٹی کے بوائے فرینڈ کا بہت خیال ہوتا ہے یہ مخلوط نظام تعلیم کے حامی بیٹی کے کلاس فیلو کے ساتھ ڈیٹ پر جانے کو روشن خیالی اور برابری تصور کرتے ہیں حالانکہ اسی مخلوط سسٹم نے ہماری نسلیں اور جوان فصلیں تباہ کر کے رکھ دی بےحیائی بےحسی معاشرے میں عام کر دی ایک وقت تها بہن بیٹی کو سیپ میں موتی کی طرح ڈهانپ کر رکها جاتا تها آج ہالف بازو پہن کر کالج آنے والی کو عزت دی جاتی ہے ننگے سر رہنے والی کو ماڈرن کہا جاتا ہے اس کے برعکس حیاء کا تاج ماتهے پر سجانے والی بیٹی کو 14سو سال پرانی سوچ کا مالک کہا جاتا ہے زہرا کی بیٹی کو پتهر کے دور کا کہہ کر طعنے دیئے جاتے ہیں میں کیوں نہ تڑپوں ایسے معاشرے کی بےحسی پر کیوں نہ خون کے آنسو رووءں کہ جوان بیٹے بیٹیاں کس طوفان بےحیائی میں ڈوب رہے ہیں اور ایک ہم ہیں کہ ساحل پہ بیٹهے یہ طوفان کی موجوں میں اپنی نسل و فصل کو غرق ہوتے بڑے شوق سے دیکھ رہے ہیں !!!

+ How to Follow the New Added Discussions at Your Mail Address?

+ How to Join Subject Study Groups & Get Helping Material?

+ How to become Top Reputation, Angels, Intellectual, Featured Members & Moderators?

+ VU Students Reserves The Right to Delete Your Profile, If?


See Your Saved Posts Timeline

Views: 411

.

+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)

Reply to This

Replies to This Discussion

 ab ap h btao kese bachuu is eshq sy jo phanse to gye hy 

RSS

Latest Activity

A_Q replied to + M.Tariq Malik's discussion ECO302 Mid Term Papers Spring 2019 (15~28-June 2019) & All Solved Past Papers, Solved MCQs & Helping Material in the group ECO302 Principles of Microeconomics
7 minutes ago
A_Q replied to + M.Tariq Malik's discussion ECO302 Mid Term Papers Spring 2019 (15~28-June 2019) & All Solved Past Papers, Solved MCQs & Helping Material in the group ECO302 Principles of Microeconomics
10 minutes ago
A_Q joined + M.Tariq Malik's group
10 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ commented on +¢αяєℓєѕѕ gιяℓ's blog post My Heart ❤️
13 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ commented on +¢αяєℓєѕѕ gιяℓ's blog post My Heart ❤️
14 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ posted discussions
17 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ replied to +¢αяєℓєѕѕ gιяℓ's discussion Me & Mid Term :-P
19 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ replied to +¢αяєℓєѕѕ gιяℓ's discussion Me & Mid Term :-P
26 minutes ago
+¢αяєℓєѕѕ gιяℓ replied to +¢αяєℓєѕѕ gιяℓ's discussion !حرف حرف رٹ کر بھی آگہی نہیں ملتی
27 minutes ago
Rana Ali posted a photo
44 minutes ago
+ ! ! ! Anny ! ! ! + updated their profile
1 hour ago
Profile IconAli, ▀▄▀▄ кαмℓα ▄▀▄▀ and AYESHA joined + M.Tariq Malik's group
1 hour ago

Today Top Members 

© 2019   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.