Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے فرمایا: تم جانتے ہو کوثر کیا


’حضرت انس بن مالک رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ ایک دن حضور نبی اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہم میں تشریف فرما تھے، اچانک آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم کو اُونگھ آ گئی (جو کہ نزولِ وحی کی کیفیات میں سے ایک کیفیت تھی)، پھر آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے مسکراتے ہوئے سر اُٹھایا تو ہم نے عرض کیا: یا رسول اللہ! کس چیز نے آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم کو ہنسایا ہے؟ آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے فرمایا: ابھی مجھ پر یہ سورہ مبارکہ نازل ہوئی: {بے شک ہم نے آپ کو (ہر خیر و فضیلت میں) بے انتہا کثرت بخشی ہےo پس آپ اپنے ربّ کے لیے نماز پڑھا کریں اور قربانی دیا کریں (یہ ہدیہ تشکرّہے)o بے شک آپ کا دشمن ہی بے نسل اور بے نام و نشاں ہو گاo} پھر آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے فرمایا: تم جانتے ہو کوثر کیا ہے؟ ہم نے عرض کیا: اللہ تعالیٰ اور اُس کا رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہی بہتر جانتے ہیں۔ آپ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے فرمایا: کوثر وہ نہر ہے جس کا میرے ربّ نے مجھ سے وعدہ کیا ہے، اِس میں خیر کثیر ہے، وہ ایک حوض ہے جس پر میری اُمت کے لوگ قیامت کے دن پانی پینے کے لیے آئیں گے، اِس کے برتن ستاروں (کی تعداد) کے برابر ہیں۔‘‘
حوالہ جات:
أخرجه مسلم في الصحيح، کتاب الصلاة، باب حجة من قال البسملة آية من أول کل سورة، 1 /300، الرقم: (53) 400،
، وأبو داود في السنن، کتاب السنة، باب في الحوض، 4 /237، الرقم: 4747،
اللهم صل على سيدنا محمد النبي الأمي
وعلى آلہ وازواجہ واھل بیتہ واصحٰبہ وبارك وسلم 
اللھم ربّنا آمین

Views: 153

Reply to This

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service