Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

سے کہنا،
ہمیں کب فرق پڑتا ہے..
کہ___،
ہم تو شاخ سے ٹوٹے ہوئے پتے
بہت عرصہ ہوا ہم کو
رگیں تک مر چکیں دل کی
کوئی پاؤں تلے روندے
جلا کر راکھ کر ڈالے
ہوا کے ہاتھ پر رکھ کر
کہیں بھی پھینک دے ہم کو
سپردِ خاک کر ڈالے
ہمیں اب یاد ہی کب ہے؟
کہ ہم بھی ایک موسم تھے
کسی گلشن کی زینت تھے
کسی ٹہنی کی قسمت تھے
کئی آنکھوں کی راحت تھے
یا جیون کی حرارت تھے
بہت عرصہ ہوا وہ خواب سا موسم
ہمارے ہاتھ سے پھسلا
یا شائید پھر خزاں موسم کو
ہم اپنا سمجھ بیٹھے
سو اس دن سے ۔۔۔۔۔۔۔۔
کسی موسم سے اب اپنا
کوئی رشتہ نہیں بنتا
کسی کی شاخ کی بانہیں
ہمیں پہچانتی کب ہیں؟
کبھی ہم ان کی دھڑکن تھے
یہ شاخیں مانتی کب ہیں.

Views: 189

Reply to This

Replies to This Discussion

thanks musk..

niceeee

muje ab ferk nahi perta ..

December bheet jane ka..

Udasi meri fitrat hai..

Ise mosam se kya matlb?

tumhare sath chalte hain hazaro'n chane wale..

mere hone na hone se..tumhain kya ferk perta hai

Zbrdst #Biryani

RSS

© 2022   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service