Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.


ترے فراق کے لمحے شمار کرتے ہوئے
بکھر گئے ہیں تیرا انتظار کرتے ہوئے

تمہیں خبر ہی نہیں ہے کے کوئی ٹوٹ گیا
محبّتوں کو بہت پائیدار کرتے ہوئے



میں مسکراتا ہوا آئینے میں ابھروں گا
وہ رو پرے گی اچانک سنگھار کرتے ہوئے

وہ کہ رہی تھی سمندر نہیں یہ آنکھیں ہیں
میں ان میں ڈوب گیا اعتبار کرتے ہوئے

بھنور جو مجھ میں پڑے ہیں وہ میں ہی جانتا ہوں
 تمھارے ہجر کے دریا کو پار کرتے ہوئے 

Views: 174

Reply to This

Replies to This Discussion

Main un me doob giya aitbaar karty hoye .

Bohat umda.

Shukria...

تمہیں خبر ہی نہیں ہے کے کوئی ٹوٹ گیا........hmmmmmmmm v nice

Thanks Girl...

ہجر لازم ہے تو یہ ہجر نبھائے جاؤ 

جا رہے ہو تو کوئی ربط بنائے جاؤ 

جو بھی اس دل پہ گزرتی ہے رقم کرتے رہو 

کیسے ممکن ہے کتابو سے بھلائے جاؤ 

شاید یہ طرز کسی روح میں گھر کر جائے 

عین ممکن ہے کسی دل میں بسائے جاؤ 

یہ مری رات بھی امید لگائے ہوئے ہے 

اس کے دامن سے کوئی صبح لگائے جاؤ 

گفتگو کرتے اگر ساتھ میں ہوتے کچھ دیر 

جاتے جاتے مجھے اک شعر سنائے جاؤ 

میری تخلیق کو آواز بنا دو ماہمؔ 

میری تحریر کی خاموشی مٹائے جاؤ 

Wah jee

bht kamal...

wah g

hn jee  

shukria



میں مسکراتا ہوا آئینے میں ابھروں گا
وہ رو پرے گی اچانک سنگھار کرتے ہوئے

yeah

RSS

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service