We have been working very hard since 2009 to facilitate in learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More

----زندگی تو بھی اب آزمانے لگی ----

موت جب میرے نزدیک آنے لگی 

زندگی پھر مجھے کیوں لبھانے لگی 

ایک تو کیا گیا ہے جہاں سے مرے 

جو بھی تھی آرزو سب ٹھکانے لگی 

خواب میں بھی بچھڑنے لگے مجھ سے تم 

نیند بھی آ کے مجھ کو ڈرانے لگی 

تو تو اپنی تھی میری تجھے کیا ہوا 

زندگی تو بھی اب آزمانے لگی 

دھوپ پر میں کوئی تبصرہ کیا کروں 

چھاؤں بھی اب تو مجھ کو جلانے لگی 

جب بھی تنہائیاں مجھ پہ حاوی ہوئی 

لفظ کاغذ پہ پھر سے سجانے لگی 

زندگی بھر کوئی ساتھ دیتا نہیں 

میں سیاؔ خود کو یوں ورغلانے لگی 


+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)


Views: 83

Reply to This

Replies to This Discussion

Jisy Smjhta Tha Zindagi wo 
Meri Dharkanon Ka Faraib Tha



Mujhy MusKuRaNa Sikha K Wo 
MeRi "RoOh" Tak Ko Rula GyA.!!

روح کو روح سے ملنے نہیں دیتا ہے بدن 

خیر یہ بیچ کی دیوار گرا چاہتی ہے 

Zindagi ka sochta hon na zamany ka sochta hon
Men to bs use apna banany ka sochta hon


Us k roth jany k andaaz ki Qasam
Wo roth jaye to manany ka sochta hon


Us ne na ke wafa to koi gila nhe
Me us se wafa nibhanay ka sochta hon


Wo mujh ko rulae to koi bat nhe
Me ro kar b usy hasanay ka sochta hon.

ترے نزدیک آ کر سوچتا ہوں 

میں زندہ تھا کہ اب زندہ ہوا ہوں 

جن آنکھوں سے مجھے تم دیکھتے ہو 

میں ان آنکھوں سے دنیا دیکھتا ہوں 

خدا جانے مری گٹھری میں کیا ہے 

نہ جانے کیوں اٹھائے پھر رہا ہوں 

یہ کوئی اور ہے اے عکس دریا 

میں اپنے عکس کو پہچانتا ہوں 

نہ آدم ہے نہ آدم زاد کوئی 

کن آوازوں سے سر ٹکرا رہا ہوں 

مجھے اس بھیڑ میں لگتا ہے ایسا 

کہ میں خود سے بچھڑ کے رہ گیا ہوں 

جسے سمجھا نہیں شاید کسی نے 

میں اپنے عہد کا وہ سانحہ ہوں 

نہ جانے کیوں یہ سانسیں چل رہی ہیں 

میں اپنی زندگی تو جی چکا ہوں 

جہاں موج حوادث چاہے لے جائے 

خدا ہوں میں نہ کوئی ناخدا ہوں 

جنوں کیسا کہاں کا عشق صاحب 

میں اپنے آپ ہی میں مبتلا ہوں 

نہیں کچھ دوش اس میں آسماں کا 

میں خود ہی اپنی نظروں سے گرا ہوں 

طرارے بھر رہا ہے وقت یا رب 

کہ میں ہی چلتے چلتے رک گیا ہوں 

وہ پہروں آئینہ کیوں دیکھتا ہے 

مگر یہ بات میں کیوں سوچتا ہوں 

اگر یہ محفل بنت عنب ہے 

تو میں ایسا کہاں کا پارسا ہوں 

غم اندیشہ ہائے زندگی کیا 

تپش سے آگہی کی جل رہا ہوں 

ابھی یہ بھی کہاں جانا کہ مرزاؔ 

میں کیا ہوں کون ہوں کیا کر رہا ہوں 

Me ne ulfat k taqazon ko nibhaya aksar
Or logon ne mera dard Brhaya aksr


Mene toty hue logon ko uthana chaha
Or logon ne sar-e-rah giraya aksr


Mene chahat ko zamane me tamasha na kia
Apny dhalty hue ashkon ko chupaya aksr


Yun tere trk-e-taluq se shikayt kesi?
Chor deta hy mera sath mera saya aksr!

کبھی خوشبو کبھی سایہ کبھی پیکر بن کر 

سبھی ہجروں میں وصالوں میں مرے پاس رہو 

Bohat khoob

nice Man

khoob 

last line....owsm

Thanks girl.

hmmm

nice

RSS

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.