Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

عشق میں دان کونا پرتا ہے
جاں کو ہلکان کرنا پڑتا ہے
تجربہ مفت میں نہیں ملتا
پہلے نقصان کرنا پرتا ہے
پھر اداسی کے بھی تقاضے ہیں
گھر کو ویران کرنا پڑتا ہے
بغیر اس کو بتاۓ نبھانا پرتا ہے
یہ عشق راز ہے
اس کو چھوپانا پرتا ہے
میں اپنے ذہن کی ضد سے پریشان ہوں
تیرے خیال کی چوکھٹ پے انا پرتا ہے

Views: 8

Reply to This

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service