Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

ایک تیری ہی خاطر جھک جاتا ہوں میں

ایک تیری ہی خاطر جھک جاتا ہوں میں
چھاؤں سے لڑ کے دھوپ میں کھڑا ہو جاتا ہوں میں

یہ لازم ہے کہ ہنس دوں جو ملیں اجالوں میں
کبھی ملنا اندھیروں میں بہت روتا ہوں میں

چپ دلیل نہیں کہ مسئلے موجود نہیں
بات یہ ہے کہ بیاں مسئلے نہیں کرتا ہوں میں

میں بہت نازک بہت نادان سا ہوں
کھونے سے بھی اور تجھے پانے سے بھی ڈرتا ہوں میں

چاہتا تو بہت ہوں کہ دم توڑ دوں اب
اس کے بھی قابل نہیں کہ روز ہی مرتا ہوں میں

ہوتی تھیں کبھی کبھی خوشیاں بھی محسوس
کہ اب تو صرف ہونٹوں سے ہی ہنستا ہوں میں

مجھے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ پہلے سے ہی بکھرا ہوں
اب گِر جاتا ہوں یا اگر ٹوٹ جاتا ہوں میں

وقت کا سورج تو پہلے ہی ڈھل چکا تھا
اب سہارے امید کے اندھیروں میں کھڑا رہتا ہوں میں

کچھ حالات بہت مہنگے تھے کہ ان کی قیمت کو،
آج بھی دل کے خزانے سے بھرتا ہوں میں

Views: 58

Reply to This

Replies to This Discussion


مجھے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ پہلے سے ہی بکھرا ہوں
اب گِر جاتا ہوں یا اگر ٹوٹ جاتا ہوں میں 

V nice...

Thanks Manto

Tumhe Maloom Hai Mohabbat Kya Hai!!!
Choro Choro Jaan Jaoge, To Jaan Se Jaoge.

!!!تمہیں معلوم ہے محبّت کیا ہے
.چھوڑو چھوڑو جان جاؤگے, تو جان سے جاؤگے

wah

Mohabbat mein jhukna koi ajeeb baat nahi,

Chamakta suraj bhi tou dhal jata hai chand k liye.

کچھ حالات بہت مہنگے تھے کہ ان کی قیمت ک
nice

RSS

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service