Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.


زمانے بھر کی نگاہوں سے ہٹ کے دیکھتے ہیں

ہر ایک موڑ سے اس کو پلٹ کے دیکھتے ہیں

سنا ہے وسعت و شہرت اسے پسند نہیں

تو ہم بھی ذات میں اپنی سمٹ کے دیکھتے ہیں

ہمیں بھی دو یہ اجازت کہ اب خوشی کے لئے

غمِ حیات سے ہم بھی نیپٹ کے دیکھتے ہیں

سنا ہے جس کو وہ چھولے مہکنے لگتا ہے

تو ہم بھی اس سے کسی دن لپٹ کے دیکھتے ہیں

ترے شہر میں جنہیں ہے قیام کی خواہش

وہ لوگ جیب میں پیسے ٹکٹ کے دیکھتے ہیں

Views: 39

Reply to This

Replies to This Discussion

سنا ہے وسعت و شہرت اسے پسند نہیں

تو ہم بھی ذات میں اپنی سمٹ کے دیکھتے ہیں....owsm

nice

واہ۔ کمال۔

سنا ہے جس کو وہ چھو لے مہکنے لگتا ھے۔۔۔

ahan great

RSS

Looking For Something? Search Below

VIP Member Badge & Others

How to Get This Badge at Your Profile DP

------------------------------------

Management: Admins ::: Moderators

Other Awards Badges List Moderators Group

Latest Activity

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service