Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.


****ہمیں تو علم سکھایا نہیں ہے تھونپا ہے ****

یہی نہیں ہے کہ شانوں سے خون بہتا ہے 

ابھی تو اپنی میانوں سے خون بہتا ہے 

وہ گال سرخ ہوئے ہوں تو یوں لگیں جیسے 

سفید ریشمی تھانوں سے خون بہتا ہے 

یہ خامشی وہ بلا ہے کہ چیخ اٹھے اگر 

تو سننے والوں کے کانوں سے خون بہتا ہے 

ہمارے خواب پٹکتے ہیں یوں ہمارے سر 

تمام رات سرہانوں سے خون بہتا ہے 

وہ جنگ جیت کے اونٹوں کا رخ بدلنے لگے 

ابھی تو ان کی مچانوں سے خون بہتا ہے 

یہ اپنے دور کے سب سے بڑے منافق ہیں 

اسی لیے تو زبانوں سے خون بہتا ہے 

تمام وقت گزرتا ہے زخم سہلاتے 

طرح طرح کے بہانوں سے خون بہتا ہے 

ہمیں تو علم سکھایا نہیں ہے تھونپا ہے 

ہمارے علمی خزانوں سے خون بہتا ہے 

نہ جانے کتنے زمانے گزر گئے ساحر 

نہ جانے کتنے زمانوں سے خون بہتا ہے

Views: 15

Reply to This

Looking For Something? Search Below

VIP Member Badge & Others

How to Get This Badge at Your Profile DP

------------------------------------

Management: Admins ::: Moderators

Other Awards Badges List Moderators Group

Latest Activity

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service