Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.


عید پھیکی لگ رھی ھے، عشق کی تاثیر بھیج
آ گلے مِل یا لباسِ عید میں تصویر بھیج

تیری خُوشبو اور کھنَک مَیں خط سے کرلُوں گا کشید
چُوڑیوں والے حنائی ہاتھ کی تحریر بھیج

دیکھ کر ویران گلیاں خوف آتا ھے مُجھے
اے خُدا ! کوئی گداگر یا کوئی رہگیر بھیج

میری آنکھوں کو نہ دے آدھی ادھوری بخشِشیں
خواب واپس چھین لے یا خواب کی تعبیر بھیج

جاں لبوں پر آگئی ھے آنسُوؤں کے قحط سے
آنکھ بُھوکی مر رھی ھے، غم کے شہدو شِیر بھیج

عید کا تُحفہ یہ کہہ کر اُس نے واپس کردیا
میرے پیروں کے لیے پائل نہیں، زنجیر بھیج

تیری لکھی قید سے باہر نکلنا ھے مُجھے
کاتبِ تقدیر ! ایسا کر، کوئی تدبیر بھیج

دُوسرے مصرعے کے گہرے راز کو فارس نہ کھول
اس غزل کو چُپکے چُپکے وادئ شیرین بھیج

Views: 16

Reply to This

Replies to This Discussion

Aalw Stranger bro

Wo mom mere ishq ki taseer se hoa...
lekin y waqia bari takheer se hoa/

RSS

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service