Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.

داستاں دل کی کبھی ہم جو سنا دیتے ہیں
غیر کہہ کر ہمیں محفل سے اٹھا دیتے ہیں
@
آپ کی یاد میں شمعیں جو جلائیں ہم نے
آپ کہتے ہیں تو یہ شمعیں بُجھا دیتے ہیں
@
بد گماں ہم سے ہوۓ جاتے ہو
کس کی خاطر
ہم تو دُشمن کو بھی اے دوست دعا دیتے ہیں
@
کیسی بستی ہے کہ جس بستی کے رہنے والے
ہم کو نا کردہ گناہوں کی سزا دیتے ہیں
@
داغِ دل ہم تو چُھپاتے ہیں تمہاری خاطر
تم جو کہتے ہو تو دُنیا کو دکھا دیتے ہیں
@
دادِ دل دینا بھی تو توفیقِ خدا ہے ناصح
قیمتِ دردِ وفا اہلِ وفا دیتے ہیں
@
جعفری قسمتِ خُفتہ تو نہ جاگی ہم سے
لوگ سُوۓ ہوۓ فتنوں کو جگا دیتے ہیں

Views: 25

Reply to This

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service