We are here with you hands in hands to facilitate your learning & don't appreciate the idea of copying or replicating solutions. Read More>>


Looking For Something at vustudents.ning.com? Click Here to Search

 


Share This With Friends......

+ Click Here To Join also Our facebook study Group.

This Content Originally Published by a member of VU Students.

+ Prohibited Content On Site + Report a violation + Report an Issue


..How to Join Subject Study Groups & Get Helping Material?..


Views: 10572

See Your Saved Posts Timeline

Reply to This

Replies to This Discussion

شہادت ہے مطلوب  و مقصود مومن 

نہ مال غینمت ، نہ کشور کشائی

صبح  بخیر  ۔   سحری  کا   وقت  ہو گیا ہے۔ 

Hmmmm Very nice .


طعن اغیار ہے ، رسوائی ہے ، ناداری ہے


کیا ترے نام پہ مرنے کا عوض خواری ہے؟

طارق  کی دعا

یا رب! دل مسلم کو وہ زندہ تمنا دے

جو قلب کو گرما دے ، جو روح کو تڑپا دے

پھر وادی فاراں کے ہر ذرے کو چمکا دے

پھر شوق تماشا دے، پھر ذوق تقاضا دے

محروم تماشا کو پھر دیدۂ بینا دے

دیکھا ہے جو کچھ میں نے اوروں کو بھی دکھلا دے

بھٹکے ہوئے آہو کو پھر سوئے حرم لے چل

اس شہر کے خوگر کو پھر وسعت صحرا دے

پیدا دل ویراں میں پھر شورش محشر کر

اس محمل خالی کو پھر شاہد لیلا دے

اس دور کی ظلمت میں ہر قلب پریشاں کو

وہ داغ محبت دے جو چاند کو شرما دے

رفعت میں مقاصد کو ہمدوش ثریا کر

خود داری ساحل دے، آزادی دریا دے

بے لوث محبت ہو ، بے باک صداقت ہو

سینوں میں اجالا کر، دل صورت مینا دے

احساس عنایت کر آثار مصیبت کا

امروز کی شورش میں اندیشۂ فردا دے

میں بلبل نالاں ہوں اک اجڑے گلستاں کا

تاثیر کا سائل ہوں ، محتاج کو ، داتا دے!

Please follow the the below link and start earning handsome money through online data entry:

goo.gl/Am4gvh

You just need an internet connection and laptop.You can do at any of your free time. Share with your other friends who are in need of money. Stay blessed.
Cheers!

ظاہر کی آنکھ سے نہ تماشا کرے کوئی

ہو   دیکھنا  تو  دیدۂ دل وا     کرے   کوئی

علم تجھ سے تو معرفت مجھ سے

تو خدا جو ، خدا نما ہوں میں

علم کی انتہا ہے بے تابی

اس مرض کی مگر دوا ہوں میں

شمع تو محفل صداقت کی

حسن کی بزم کا دیا ہوں میں

تو زمان و مکاں سے رشتہ بپا

طائر سدرہ آشنا ہوں میں

کس بلندی پہ ہے مقام مرا

عرش رب جلیل کا ہوں میں!

RSS

Latest Activity

Study Corner For DigiSkills Students

Today Top Members 

© 2019   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service