We have been working very hard since 2009 to facilitate in your learning Read More. We can't keep up without your support. Donate Now.

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More


(ہم انسان کے روپ میں اپنے لیے خدا تلاشتے ہیں)۔
۔
ہم ایک ایسا انسان چاہتے ہیں جو ہمارے گرد مانندِ حصار ہر لمحہ سایے کی طرح موجود رہے۔ ہمیں اپنی بانہوں میں بھرے اور بھینچ کر سینے سے ایسے لگائے رکھے کہ ہمیں زندگی کی گرمی ، اور ہر رنج و غم و الم اور مصائب و پریشانیوں سے امن و سلامتی اور سکون و اطمینان محسوس ہو ، جو ہمارے لیے ایک ایسی پُرسکون پناہ گاہ بنے کہ زندگی کے ستاتے ہوئے لمحوں میں ہم اس کی طرف اُمید سے دیکھیں ، اس کی موجودگی ہی ہمارے لیے خوشی اور اطمینان ہو۔
۔

جو ہمیں ویسے ہی سمجھتا ہو جیسے کہ ہم خود کو سمجھا جانا چاہتے ہیں ، جو ہمارے ہر جذبے اور احساس کو ویسے محسوس کرے جیسے کہ ہم خود محسوس کرتے ہیں ، جو ہماری چاہتوں اور خواہشات کی باریک نبضوں کی دھڑک تک کا آشنا و جانکار ہو۔ جو ہمارے ہر درد کا ہمراز و ہمنوا ہو ، جو ہمیں طعنہ نہ دے ، غصہ نہ کرے اور ہمیں ڈانٹ نہ پلائے ، اور ہمارے لیے اس کی چاہت میں کمی واقع نہ ہو ، جو ہماری ذات سے تھکن اور غم کا احساس نہ کرے ، جس کے ساتھ ہم بچہ بن سکیں۔
۔

جو ہمارے ناقابلِ بیان درد کا آشنا ہو ، جب ہم ناراض ہوں تو ہمیں مسلسل منائے اور مناتے ہوئے تھکتا نہ ہو ، بھلے ہی غلطی ہماری ہو ، اگر ہم اس سے ناراض ہوں تو وہ ہم سے ناراض نہ ہو بلکہ ہمیں دیکھ کر اس کی آنکھیں ہمیشہ چمکتی رہیں ، لب مسکاتے رہیں اور پیشانی کشادہ رہے۔
۔

جو ہماری ذات کی حقیقی تاریکیوں میں ہمیں دیکھ کر بھی ہم سے نفرت نہ کرے ، ہم سے دور نہ ہو بلکہ تمام تر عیوب کے ساتھ ہمیں قبول کرے ، جو ہمارے دامنِ داغدار دیکھ کر ہم سے اپنا دامن نہ چھڑائے ، جو ہماری زندگی کے مقاصد میں ہمارا بصیر و ہمسفر ہو۔
۔

جس کی محبت ، جانثاری ، وفاداری ، اور اخلاصِ کامل کا مرکز و محور ہماری ذات ہو ، جس کے وجود میں ہم بلا جھجھک پیوست ہو سکیں اور خود کو اس کے وجود کا حصہ محسوس کر سکیں ، جس کی ہمنوائی و ہمراہی و ہم نشینی میں ہم خود کو ، اپنے وجود کو ، اپنی ذات و شخصیت کو خاص محسوس کر سکیں ، جو اپنی وجود کے لمس سے ہمارے وجود کو معتبر کر دے ، جو ہماری انانیت کو سہہ سکے۔
۔تو کیا ایسا انسان ممکنات میں سے ہے ؟ کیا ہم واقعی ایسا انسان ہی چاہتے ہیں ؟ یا خدا چاہتے ہیں جو بلا شکرتِ غیرے ہمارا ہو ؟


+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)


Views: 156

Reply to This

Replies to This Discussion

ہاں شاید ایسا ہی ہے ۔۔۔ ہم انسان ک روپ میں خدا جیسا ساتھی چاھتے ہیں جو صرف ہمارا ہو ۔۔ خدا ہم سب کا ہے مگر ہم سب کے لئے نہیں بس اپنے لئے چاھتے ہیں کوئی ایک جس میں یہ سب خوبیاں ہوں جو صرف شرک برداشت نہ کرے باقی ہر غلطی ذرا سی معافی پہ معاف کر دے 

haleeema sare dunya me deko Allah pak hi srf pr ammi abbu hi jo kuch na b bolo smj ti hi ye chati ho me

hmmmmmmmmmmm

 hmmmmmm  thought-provoking .....

ALLAH ky siwa mama or abu ky bd koi ni ha is duniya ma.....

jo yh sb ap ko dy sky ! OR

only ture relation ma ap ko sb milta ha..... NOT fake relation ma.........

ALLAH PAK apny bando sy bht pyar jo karty ha na cute is liy

haani mai ussi rishty ki bat krrhi huun joo aaajkl napaid hai hamary mashray mai

hmm bhool gyee wo sbbb

ni  cute ma bhooli ni mujh yaad ha ma ny uper comment ma kha ha ya sb ture relation ma milta ha not fake.....

baki ap khud samjhdar ha

uss rishty ki el krii majazii huda HAI

or majazii khuda ko shadi shuda log zyada achy se bta skty ha  

hahahahha acha

hahahahahahhaha 

ha ji!

Sirf mom dad hi hote hn is duniya me jo hame hr gham se mhfooz rkhna chahte hn

RSS

Looking For Something? Search Here

HELP SUPPORT

This is a member-supported website. Your contribution is greatly appreciated!

© 2020   Created by +M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.