Latest Activity In Study Groups

Join Your Study Groups

VU Past Papers, MCQs and More

We non-commercial site working hard since 2009 to facilitate learning Read More. We can't keep up without your support. Donate.


(((((((((((((((عشق کے رنگ))))))))))))))))

اوکھے پینڈے لمیاں نے راہواں عشق دیاں
درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں
اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ

ہائے پھلاں ورگی جندڑی __عشق رُلا چھڈدا
سرِ بازار ۔۔وچالے عشق۔,,نچا ,, چھڈ دا
ہائے ککھ نہ۔۔ چھڈے ۔۔دیکھ وفاواں عشق دیاں
اوکھے پینڈے __ لمیاں راہوں عشق دیاں
درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں
اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ



ہر ہر __دل ہر __تھاں اچ عشق سمایا اے
عرش فرش تے ۔۔عشق نے قدم ٹکایا ۔۔اے
عین چوداں طبقاں۔۔اندر تھاواں عشق دیاں
اوکھے پینڈے لمیاں راہواں عشق دیاں
عین باطن ۔۔۔عین الحق صداواں عشق دیاں
اوکھے پینڈے لمیاں راہواں عشق دیاں
درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں
اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ

Photo: ‎اوکھے پینڈے لمیاں نے راہواں عشق دیاں درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ ہائے پھلاں ورگی جندڑی __عشق رُلا چھڈدا سرِ بازار ۔۔وچالے عشق۔,,نچا ,, چھڈ دا ہائے ککھ نہ۔۔ چھڈے ۔۔دیکھ وفاواں عشق دیاں اوکھے پینڈے __ لمیاں راہوں عشق دیاں درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ ہر ہر __دل ہر __تھاں اچ عشق سمایا اے عرش فرش تے ۔۔عشق نے قدم ٹکایا ۔۔اے عین چوداں طبقاں۔۔اندر تھاواں عشق دیاں اوکھے پینڈے لمیاں راہواں عشق دیاں عین باطن ۔۔۔عین الحق صداواں عشق دیاں اوکھے پینڈے لمیاں راہواں عشق دیاں درد جگر وچ سخت سزاواں عشق دیاں اللہ ہو ۔۔اللہ ہو ۔۔اللہ ہو اللہ راجا نعمان‎

--------------------------------------------------------------------

در راہِ حق اندیشی میپویم و می رقصم
دست از خودی و خویشی میشویم و می رقصم

حق کے راستے میں ڈرتا ہوا دوڑتا ہوں اور رقص کرتا ہوں، اپنی خودی اور اپنی ذات سے ہاتھ دھوتا ہوں اور رقص کرتا ہوں

گہہ گریم و گہہ خندم ، دست زنم گہہ پا
از مستی و جوش اندرہا ہویم و می رقصم

کبھی روتا ہوں کبھی ہنستا ہوں کبھی ہاتھ ، پیرمارتا ہوں، مستی و جوش کے ساتھ باطن میں شور مچاتا ہوں اور رقص کرتا ہوں

جامے زمئے باقی از دستِ خوشی ساقی
باکثرتِ مشتاقی میجویم و می رقصم

ساقی کے مبارک ہاتھوں سے باقی شراب کا ،بہت اشتاق سے میں طالب ہوں اور رقص کرتا ہوں

از جامہٴ و جسمانی زاں یوسفِ لاثانی
بوئے خوش روحانی میبویم و می رقصم

جامہٴ جسمانی سے یوسفِ لاثانی کے جیسے،روحانی خوشبو سونگھتا ہوں اور رقص کرتا ہوں

در شوقِ جمالِ او یک دل شدم و یکرو
لاواحد الاّ ھو میگویم و می رقصم

اس کے حسن و جمال کے شوق میں میرا چہرہ اور دل ایک ہی ہوگیا ہے ، زبان سے سوائے اس کے کوئی یکتانہیں کہتا ہوں اور رقص کرتا ہوں

در راہِ شدو آمد مانند دمم بیحد
ہم سبزہ نمط بے حد میرویم و می رقصم

اس کی راہ میں بے حساب سانسوں کی طرح بار بار آتا جاتاہوں ، سبزہ کی طرح بے حساب اگتا ہو ں اور رقص کرتا ہوں

چوں رفت نیاز از خود و زِکون و مکاں برشد
زد نعرہ کہ من بیخود ، خود اویم و می رقصم

جب نیاز خود اپنے سے گیا اور کون و مکاں سے باہر ہوگیا ،تو اس نے نعرہ لگایا کہ میں بے خود” وہی “ ہوں اور رقص کرتا ہوں

کلام ؛ حضرت شاہ نیاز بریلوی رحمة اللہ علیہ
راجا نعمان

Photo: ‎در راہِ حق اندیشی میپویم و می رقصم دست از خودی و خویشی میشویم و می رقصم حق کے راستے میں ڈرتا ہوا دوڑتا ہوں اور رقص کرتا ہوں، اپنی خودی اور اپنی ذات سے ہاتھ دھوتا ہوں اور رقص کرتا ہوں گہہ گریم و گہہ خندم ، دست زنم گہہ پا از مستی و جوش اندرہا ہویم و می رقصم کبھی روتا ہوں کبھی ہنستا ہوں کبھی ہاتھ ، پیرمارتا ہوں، مستی و جوش کے ساتھ باطن میں شور مچاتا ہوں اور رقص کرتا ہوں جامے زمئے باقی از دستِ خوشی ساقی باکثرتِ مشتاقی میجویم و می رقصم ساقی کے مبارک ہاتھوں سے باقی شراب کا ،بہت اشتاق سے میں طالب ہوں اور رقص کرتا ہوں از جامہٴ و جسمانی زاں یوسفِ لاثانی بوئے خوش روحانی میبویم و می رقصم جامہٴ جسمانی سے یوسفِ لاثانی کے جیسے،روحانی خوشبو سونگھتا ہوں اور رقص کرتا ہوں در شوقِ جمالِ او یک دل شدم و یکرو لاواحد الاّ ھو میگویم و می رقصم اس کے حسن و جمال کے شوق میں میرا چہرہ اور دل ایک ہی ہوگیا ہے ، زبان سے سوائے اس کے کوئی یکتانہیں کہتا ہوں اور رقص کرتا ہوں در راہِ شدو آمد مانند دمم بیحد ہم سبزہ نمط بے حد میرویم و می رقصم اس کی راہ میں بے حساب سانسوں کی طرح بار بار آتا جاتاہوں ، سبزہ کی طرح بے حساب اگتا ہو ں اور رقص کرتا ہوں چوں رفت نیاز از خود و زِکون و مکاں برشد زد نعرہ کہ من بیخود ، خود اویم و می رقصم جب نیاز خود اپنے سے گیا اور کون و مکاں سے باہر ہوگیا ،تو اس نے نعرہ لگایا کہ میں بے خود” وہی “ ہوں اور رقص کرتا ہوں کلام ؛ حضرت شاہ نیاز بریلوی رحمة اللہ علیہ راجا نعمان‎

Views: 450

Comment

You need to be a member of Virtual University of Pakistan to add comments!

Join Virtual University of Pakistan

Comment by aflaToN mUndA ►►► on March 9, 2013 at 10:02pm

Comment by zain ul abdin(mit final) on March 9, 2013 at 3:51pm

Comment by _Mr-_-_-_cOoL_ on March 9, 2013 at 2:35pm

waoo eshiqqq

Comment by + Almas on March 9, 2013 at 1:54pm

Superb

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service