مسکراہٹ ایک ایسا انمول تحفہ ہے جو غریب سے غریب آدمی بھی کسی کو پیش کر سکتا ہے۔ جس طرح دنیا کے تمام لوگوں کا ایک ہی نام انسان ہے مگر ہر انسان کا چہرہ مختلف ہے، اسی طرح مسکراہٹ کے مختلف مواقع پر مختلف معنی ہوتے ہیں۔
ایک مسکراہٹ وہ ہوتی ہے، جو تصویر بنواتے وقت فوٹوگرافر کے کہنے پر زبردستی چہرے پر لائی جاتی ہے، یہ بناوٹی مسکراہٹ ہوتی ہے۔
ایک مسکراہٹ۔ ۔ جو ائیرہوسٹس کے چہرے پر ہوتی ہے پروفیشنل مسکراہٹ کہلاتی ہے اور
مجبوری کی مسکراہٹ ہوتی ہے۔
بیوی کے چہرے پر معنی خیز مسکراہٹ ہوتی ہے اور اس مسکراہٹ کے پیچھے کوئی نہ کوئی فرامئش یا مطالبہ کارفرما ہوتا ہے لیکن بیوی کے چہرے پر مسکراہٹ پہلی سے دس تاریخ تک یا شاپنگ کے وقت ہی نمودار ہوتی ہے۔
ڈانٹ کھانے کے باوجود ظاہر ہونے والی ڈھٹائی پن کی مسکراہٹ ہوتی ہے۔ ہوم ورک نہ کرنے پر کلاس میں ٹیچر نے ایک طالب علم کو ڈانٹا مگر وہ مسکراتا رہا۔ ٹیچر نے غصے میں طالب علم کی مرمت کردی مگر وہ ڈھیٹ تب بھی مسکراتا رہا۔ ٹیچر نے اس سے کہا۔ “تمہیں شرم نہیں آتی، مار کھا کر بھی مسکرا رہے ہو۔“ طالب علم نے جواب دیا۔ “سر، آپ نے ہی تو ایک مرتبہ کہا تھا کہ ہر مصیبت کا مقابلہ مسکراتے ہوئے کرو۔“
شیرخوار بچے کے چہرے پر آنے والی مسکراہٹ سب سے زیادہ معصوم اور ہر قسم کی ملاوٹ سے پاک ہوتی ہے۔

اس دنیا میں بعض لوگ ایسے بھی ہوتے ہیں جن کے متعلق دل میں تمنا ہوتی ہے کہ کاش !! ان کے چہرے پر کبھی مسکراہٹ آ جائے،
اگر ڈاکٹروں کے چہروں پر مسکراہٹ آ جائے، سچ مچ کتنے ہی مریض تندرست ہو کر اسپتال سے اپنے گھروں کو لوٹ جائیں۔
اگر پولیس والوں کے چہرے پر مسکراہٹ آ جائے تو عوام کے کتنے ہی زخموں کو مرہم مل جائے۔
اگر بیویوں کے چہروں پر مسکراہٹ آ جائے تو شوہر غیروں کی مسکراہٹ پر فدا نہ ہوں۔
مسکراہٹ کی سب سے خطرناک قسم طنزیہ مسکراہٹ ہے۔ یہ وہ مسکراہٹ ہوتی ہے جب کوئی کسی کو اپنے سے کمتر اور حقیر سمجھ کر طنزیہ طور پر مسکراتا ہے۔
یہ مسکراہٹ بے حد نقصان دہ ہے کیونکہ جس کو دیکھ کر آپ طنزیہ مسکرا رہے ہیں، ہو سکتا ہے وہ اپنے کسی عمل کی وجہ سے اللہ تعالٰی کے نزدیک آپ سے بہتر ہو۔
مسکراہٹوں کے پھول بکھیرتے جائیے۔ بڑے عظیم ہوتے ہیں وہ لوگ، جو غم اور دکھ اپنے سینے میں چھپا کر ہر ایک کو مسکراہٹ کا تحفہ پیش کرتے ہیں. —

Views: 264

Comment

You need to be a member of Virtual University of Pakistan to add comments!

Join Virtual University of Pakistan

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:44pm

Thanku so much..

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:44pm

Thanks Xavier

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:44pm

Thanks a lot for ur nice comments

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:43pm

Thanku so much

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:43pm
Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:43pm

Thanks for commenting here..

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:43pm
Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:42pm

Thanku so much

Comment by + ✿´´cм(ɴɪѕα)``✿ on January 30, 2014 at 2:42pm

Thanks amina

Comment by Humna Afzal on January 21, 2014 at 11:46pm

© 2021   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service