.... How to Find Your Subject Study Group & Join ....   .... Find Your Subject Study Group & Join ....  

We are here with you hands in hands to facilitate your learning & don't appreciate the idea of copying or replicating solutions. Read More>>

Study Groups By Subject code Wise (Click Below on your university link & Join Your Subject Group)

[ + VU Study Groups Subject Code Wise ]  [ + COMSATS Virtual Campus Study Groups Subject Code Wise ]

Looking For Something at vustudents.ning.com? Search Here

فاطمہ امی سے ضد کرتی ہے کہ مجھے بھی کپڑے استری کرنے ہیں۔ نہیں کرن بیٹا! ابھی نہیں… تم کپڑے استری کرنے کے لئے بہت چھوٹی ہو۔ امی! ایک دفعہ!بس ایک بار کرنے دیں… اچھا، اچھا! فاطمہ یہ لو… بھائی کا واشن ویئر کا کرتا ہے اسے استری کرو اور استری تین اور چار نمبر پر رکھ کر کرنا… جی امی ! کرن میں کچن میں جا رہی ہوں دھیان سے استری کرنا… جی امی فکر نہ کریں… امی کا باہر نکلنا ہی تھا کہ فاطمہ نے استری کو چھ نمبر پر کر دیا۔

اور پھر کیا ہونا تھا؟ کرتا جل گیا۔ فاطمہ کا ایک رنگ جائے اور ایک رنگ آئے اب کیا ہو گا؟ امی تو ڈانٹیں گی۔ ان کے منع کرنے کے باوجود میں نے ضد کی…اتنے میں فاطمہ کی امی کمرے میںداخل ہوئیں اور فاطمہ کو صوفے پر ہاتھ پکڑے پریشانی کے عالم میں پایا… کیا ہوا فاطمہ؟ امی! امی! مجھے کرنٹ لگ گیا… ماں نے فاطمہ کو گلے لگایا جلد ہی پہلے استری کے میز کی جانب بڑھیں تو استری کرتے کے اوپر پڑی تھی ماں نے جلے کرتے کو زمین پر پھینکا اور کہا کہ بھاڑ میں جائے یہ کرتا اللہ کا شکر ہے کہ تم بچ گئی ماں کا پیار دیکھتے ہوئے اور جھوٹ کا پلڑا بھاری ہونے کی وجہ سے فاطمہ دل ہی دل میں خوش ہو رہی تھی…

پھر وہ دن جائے اور آج کا دن آئے فاطمہ کو جب بھی ماں سے ڈانٹ پڑنے کا خطرہ لاحق ہوتا تو وہ جھوٹ کا سہارا لے کر بات پلٹ دیتی… رات کو جب فاطمہ کے چھوٹے بھائی نے دادی ماں سے کہانی سننے کا اصرارکیا تودادی ماں نے ایک شخص کی کہانی سنائی جو راستے میں پڑے سردی کے باعث کانپنے والے سانپ کے بچے کو گھر لے آیا اور آگ جلا کر اسے راحت پہنچائی اور اسے مرنے سے بچا لیا یہاں تک کہ دو سال تک اسے پالا خوب دیکھ بھال کی اور صبح و شام اسے دودھ پلاتا… ایک دن جب وہ شخص سو رہا تھا تو سانپ نے اسے ڈنک مار دیا… دادی ایسا کیوں کیا اس نے ؟ ایسا اس لئے ہوا کہ سانپ کی فطرت میں ہے ڈنک مارنا… عادت کو بدلا جا سکتا ہے فطرت کو نہیں… اور یہی حال انسان کا ہے جب انسان اپنی عادت کو بدلتا نہیں تو وہ فطرت بن جاتی ہے اور کبھی نہیں بدلتی۔

فاطمہ کے دادی ماں کی بات سے سنتے ہی اوسان خطا ہو گئے اور سوچنے لگی کہ کہیں میری جھوٹ بولنے والی عادت بھی فطرت کی شکل اختیار نہ کر لے؟ نہیں میں ایسا نہیں ہونے دوں گی؟ اب سے میںکبھی جھوٹ نہیں بولوں گی… انسان کو ہمیشہ اپنی بری عادتوں کو ترک کرنے کی کوشش کرنی چاہئے ایسا نہ ہو کہ بری عادات فطرت بن جائیں۔

Share This With Friends......


How to Find Your Subject Study Group & Join.

Find Your Subject Study Group & Join.

+ Click Here To Join also Our facebook study Group.


This Content Originally Published by a member of VU Students.

+ Prohibited Content On Site + Report a violation + Report an Issue

+ Safety Guidelines for New + Site FAQ & Rules + Safety Matters

+ Important for All Members Take a Look + Online Safety


Views: 85

See Your Saved Posts Timeline

Comment

You need to be a member of Virtual University of Pakistan to add comments!

Join Virtual University of Pakistan

Comment by + υикиσωи "S" ♥ツ on October 9, 2018 at 11:15am

Thank yOu kOjiii <3

Comment by + ! ❤SΕNSΙТΙVΕ(∂ΕSΕЯТ ΡЯΙNCΕSS)❤ on October 9, 2018 at 10:38am

<3

nice sharing

Donation

A quality education changes lives & start with you.

Forum Categorizes

Job's & Careers (Latest Jobs)

Admissions (Latest Admissons)

Scholarship (Latest Scholarships)

Internship (Latest Internships)

VU Subject Study Groups

Other Universities/Colleges/Schools Help

    ::::::::::: More Categorizes :::::::::::

Member of The Month

1. ♥Farrukh♥Kamboh (BSCS)

Sheikhupura, Pakistan

© 2018   Created by + M.TariK MaliC.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service