We are here with you hands in hands to facilitate your learning & don't appreciate the idea of copying or replicating solutions. Read More>>

Looking For Something at vustudents.ning.com? Click Here to Search

www.bit.ly/vucodes

+ Link For Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution

www.bit.ly/papersvu

+ Link For Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More


Dear Students! Share your Assignments / GDBs / Quizzes files as you receive in your LMS, So it can be discussed/solved timely. Add Discussion

How to Add New Discussion in Study Group ? Step By Step Guide Click Here.

آج کا دن مارگریٹ مارکوس کے نام

آج کا دن مارگریٹ مارکوس کے نام

وہ 23 مئی 1934ء کو نیویارک کے ایک جرمن یہودی گھرانے میں پیدا ہوئی۔ اس کا نام Margret Marcus رکھا گیا۔ انتہائی ذہین، حساس اور کم گو مارگریٹ کو زمانہ طالبعلمی ہی سے مختلف مذاہب جاننے کا شوق پیدا ہو گیا دوسری جنگ عظیم کے دنوں میں وہ ایک مقامی سکول کی طالبہ تھی۔ ایک طرف اسے اپنے والدین کے وطن جرمنی میں ایڈولف ہٹلر کے مظالم کے بارے میں پتہ چلتا، ہولوکاسٹ کی تصاویر دیکھتی اور پریشان ہو جاتی لیکن دوسری طرف فلسطینیوں کے ساتھ روا رکھے یہودی ظلم پر وہ ننھی لڑکی آبدیدہ ہو جاتی۔

مارگریٹ کی کتاب "احمد الخلیل - ایک فلسطینی مہاجر" میں اس کے بےچین, بچپن اور گداز دل کی داستان مل سکتی ہے۔ 19 سالہ یہ لڑکی 1953ء میں یونیورسٹی آف راچسٹر میں داخل ہو گئی کچھ ماہ بعد وہ نیویارک یونیورسٹی میں منتقل ہو گئی۔ یہاں اس نے یہودیت کی مختلف شاخوں اور بہائی مذہب کا مطالعہ کیا تو وہ الجھ گئی۔ اس نے معروف یہودی سکالر Abraham Katsch سے ایک مضمون "اسلام پر یہودیت کے احسانات" پڑھنا شروع کیا تو اس کو شدید نفسیاتی عارضہ لاحق ہو گیا تھا۔ معمولی علاج کے بعد اس لڑکی کا رجحان اسلام کی طرف بڑھ گیا۔ تین سال تک نیویارک یونیورسٹی میں مذاہب کے تقابلی جائزے نے اسے گھما ڈالا تھا۔ 1956ء میں مارگریٹ شیزوفینیا کا ایسا شکار ہوئی کہ اس نے بغیر گریجوایشن کئے ہی یونیورسٹی چھوڑ دی۔ گھر والوں نے ہسپتال داخل کروا دیا جہاں تقریباً وہ دو سال زیرِ علاج رہی۔ اس دوران بھی مارگریٹ نے مختصر مدت کے سوا مطالعہ ترک نہ کیا۔ 1958ء میں مکمل صحتیابی کے بعد اس نے عربی زبان و ادب سمجھنا شروع کیا تو علامہ اسد کی کتاب "The Road to Mecca" سے آغاز کیا جس نے مارگریٹ کو اتنا متاثر کیا کہ اس نے علامہ اسد ہی کا انگریزی ترجمہؑ قرآن الحکیم شروع کر دیا۔ وہ بےچین تھی اور اسلام بارے مزید جاننا چاہتی تھی۔

ایک دن نیویارک کے ایک مقامی لائبریرین نے پاکستانی سکالر سید ابوالاعلیٰ مودودی بارے بتایا۔ ان کی کتاب "دینیات" جس کا انگریزی ترجمہ "Towards Understanding Islam" کے نام سے اسلامک پبلیکیشنز لاہور نے چھاپا تھا، منگوا کر پڑھا۔۔۔ مارگریٹ کے من کی دنیا ہی بدل گئی۔ اس نے سید مودودی کو خط لکھ لکھ کرنا کر اپنے ابہام دور کرنا شروع کئے۔ سید مودودی نے کئی کتابیں بھی مارگریٹ کو بھجوائیں۔ یہاں تک کہ اسلام بارے مارگریٹ کو پورا تیقن حاصل ہو گیا۔ معلوم تاریخ میں یہ پہلا واقع تھا کہ کسی غیر مسلم نے اسلام کو سمجھنے کے لئے، قبول کرنے لے لئے اتنی ریسرچ اور سوال و جواب کئے ہوں۔ اسلام کے نظام معیشت و معاشرت سے لیکر توحید و رسالت، ختم نبوت تک کی بنیادی جزئیات سمجھی ہوں۔ بالآخر 24 مئی 1961ء کو 27 سالہ مارگریٹ نے نیویارک کی ایک مقامی مسجد میں جا کر اسلام قبول کر لیا۔ الحمد للہ
سید ابوالاعلیٰ مودودی کی دعوت پر مارگریٹ مارکوس جو اب مریم جمیلہ تھیں، پاکستان تشریف لائیں اور پھر پاکستان ہی کی ہو کر رہ گئی۔ اسلام پورہ لاہور کے محمد یوسف خان سے ان کی شادی ہوئی۔ مریم جمیلہ نے شادی کے بعد اسلام اور مغرب کی کشمکش سمیت کئی موضوعات پر بیشمار کام کیا۔ 30 سے زائد کتب لکھیں جن میں سے چند درج ذیل ہیں۔
A great Islamic movement in Turkey: Badee-u-Zaman Said Nursi
A manifesto of the Islamic movement
A select bibliography of Islamic book BCs in English
Ahmad Khalil: the biography of a Palestinian Arab refugee
At home in Pakistan (1962-1989) : the tale of an American expatriate in her adopted country
Correspondence between Abi-l-A'La Al-Maudoodi and Maryam Jameelah
Islam and Modernism
Islam and orientalism
Islam and the Muslim woman today
Islam and our social habits : Islamic manners versus Western etiquette
Islam and modern man : the prospects for an Islamic renaissance, the call of Islam to modern man
Islam versus Ahl al-Kitab: past and present
Islam versus the West
Islamic culture in theory and practice
Islam face to face with the current crisis
Is Western civilization universal?
Memoirs of childhood and youth in America (1945-1962) : the story of one Western convert's quest for truth
Modern technology and the dehumanization of man
Shaikh Hassan alBanna & al Ikhwan al-Muslimun
Shaikh Izz-ud-Din Al-Qassam Shaheed : a great Palestinian mujahid, (1882-1935) : his life and work
Shehu Uthman dan Fodio, a great mujaddid of West Africa
The Generation Gap - Its Causes and Consequences
The Holy Prophet and his impact on my life
The resurgence of Islam and our liberation from the colonial yoke
Three Great Islamic Movements in the Arab World of the Recent Past
Two great Mujahadin of the recent past and their struggle for freedom against foreign rule : Sayyid Ahmad Shahid; Imam Shamil: a great Mujahid of Russia
Westernization and Human Welfare
Western civilization condemned by itself; a comprehensive study of moral retrogression and its consequences
Western imperialism menaces Muslims
Why I embraced Islam

31 اکتوبر 2012ء میں اسلام کی اس بیٹی نے داعیؑ اجل کو لبیک کہا اور اس فانی دنیا سے رخصت ہو گئیں۔ مجھے یہ اعزاز حاصل ہے کہ میں نے اس محسنہ کے جنازے میں شرکت کرنے کی سعادت حاصل کی۔
Copy

+ How to Follow the New Added Discussions at Your Mail Address?

+ How to Join Subject Study Groups & Get Helping Material?

+ How to become Top Reputation, Angels, Intellectual, Featured Members & Moderators?

+ VU Students Reserves The Right to Delete Your Profile, If?


See Your Saved Posts Timeline

Views: 34

.

+ http://bit.ly/vucodes (Link for Assignments, GDBs & Online Quizzes Solution)

+ http://bit.ly/papersvu (Link for Past Papers, Solved MCQs, Short Notes & More)

+ Click Here to Search (Looking For something at vustudents.ning.com?)

+ Click Here To Join (Our facebook study Group)

Comment

You need to be a member of Virtual University of Pakistan to add comments!

Join Virtual University of Pakistan

Latest Activity

Today Top Members 

© 2019   Created by + M.Tariq Malik.   Powered by

Promote Us  |  Report an Issue  |  Privacy Policy  |  Terms of Service

.